براہ کرم پہلے مطلوبہ لفظ درج کریں
سرچ
کی طرف سے تلاش کریں :
علماء کا نام
حوزات علمیہ
خبریں
ویڈیو
15 شَوّال 1445
ulamaehin.in website logo
مولانا سید نجم الحسن کراروی

مولانا سید نجم الحسن کراروی

Maulana Syed Najmul Hasan Kararvi

ولادت
2 صفر 1337 ه.ق
الہ آباد
وفات
9 رمضان المبارک 1402 ه.ق
پیشاور
والد کا نام : فیض محمد
تدفین کی جگہ : پیشاور
شیئر کریں
ترمیم
کامنٹ
ولادت
1337 ه.ق
مدرسہ ناظمیہ میں داخلہ
1346 ه.ق
سلطان المدارس میں داخلہ
1350 ه.ق
فاضل فقہ، دبیر کامل، سند الافاضل کی سند دریافت کرنا
1353 ه.ق
تبلیغ کے لئے پشاور پاکستان جانا
1361 ه.ق
وفات
1402 ه.ق
سوانح حیات
اساتید
دینی اور قومی خدمات
پنڈت نیک رام
تصنیفات
تصاویر
متعلقہ لنکس

سوانح حیات

آپ 2 صفرالمظفر سنہ 1337ھ مطابق 7 نومبر 1918ء بروز پنجشنبہ، قصبہ کراری ضلع الہ آباد (اتر پردیش) میں پیدا ہوئے ۔ آپ کے والد کا نام فیض محمد تھا ۔ مرحوم کا خاندان کئی پشتوں سے علم و ادب کا مرکز رہا ہے۔  پرائمری تک تعلیم حاصل کرنے کے بعد آپ کو مدرسہ میں داخل کرا دیا گیا جہاں مولانا سید محمد ضامن ، مولانا سید محمد موسٰی ، مولانا سید علی لکھنوی سے ابتدائی تعلیم حاصل کی۔ اس کے بعد آپ کو سنہ 1927 میں مدرسہ ناظمیہ لکھنو میں داخل کرا دیا گیا - یہاں پر 3 سال تعلیم حاصل کرنے کے بعد آپ سلطان المدارس لکھنو تشریف لے گئے۔

سنہ 1934 میں الہ آباد یونیورسٹی سے "فاضل فقہ" لکھنو یونیورسٹی سے " دبیر کامل" اور جامعہ سلطانیہ لکھنو سے "سند الافاضل " کا امتحان پاس کیا۔

سنہ 1936 میں الہ آباد یونیورسٹی سے "فاضل طب" اور شعیہ عربک کالج سے " عماد الادب" کا امتحان پاس کیا – سنہ 1938 میں "صدر الافاضل " کی سند حاصل کی۔

 

مولانا سید نجم الحسن کراروی مرحوم کے صاحب زادے فخر الحسن کراروی بھی نامور ہیں۔

مولانا سید نجم الحسن کراروی 1942 میں پشاور تشریف لائے اور جامع مسجد کو چہ رسالدار کی پیش نمازی سنبھالی اور درس وتدریس پھر سے شروع کیا اور خود کو اہل پشاور کے لئے وقف کر دیا۔

مولانا سید نجم الحسن کراروی کا انتقال 9 رمضان المبارک 1402 ہجری مطابق یکم جولائی 1982 کو پشاور میں ہوا - آپ کی آخری آرام گاہ پشاور میں ہے۔

مزید دیکھیں

اساتید

آپ نے درج ذیل اساتذہ سے درس نظامی کے اسباق لئے

سید عالم حسین مرحوم

شمس العلما سرکار ناصر الملت مرحوم

شمس العلما سرکار نجم الملت مرحوم

شمس العلما مولانا سید ابن حسن مرحوم

علامہ ظہور حسین مرحوم

نادرۃ الزمن مولانا سید ابن حسن نو نہروی مرحوم

مولانا سید نجم الحسن کراروی مرحوم نے تجوید و قراءت کے لئے مولانا غلام محمد بلتستانی کے سامنے زانوئے ادب تہہ کیا۔

مولانا سید نجم الحسن کراروی مرحوم نے درس خارج آیت اللہ محسن الحکیم اور آیت اللہ شریعتمدار سے مکمل کئے۔

 

مزید دیکھیں

دینی اور قومی خدمات

آپ نے مدرسۃ الواعظین سے فارغ ہو کر ایک مدت تک بہار اور دیگر صوبوں میں تبلیغی خدمات انجام دیں ۔

17/ جنوری 1941ء کو آپ نے قصبہ کراری میں ایک مدرسہ بنام مدرسہ امجدیہ قائم کیا جو آج بھی باقی ہے ۔

سنہ 1943ء میں مدرسۃ الواعظین لکھنؤ کے معروف رسالہ، الواعظ کی ادارت آپ اور مولانا محسن علی عمرانی کے سپرد کی گئی ۔

تقسیم ہندوستان کے بعد آپ پاکستان کے شہر پشاور ہجرت کر گئے ،ـ وہاں آپ نے محراب اور منبر کے فرائض انجام دینے کے ساتھ ساتھ، بہت سی دینی خدمات انجام دیں ۔

سنہ 1948ء میں اپنے دیرینہ دوست مولانا محسن علی عمرانی کے ساتھ مل کر پشاور میں پاکستان مجلس علماء شیعہ کا قیام عمل میں آیا جس کے آپ ناظم اعلیٰ مقرر ہوئے ۔

مئی سنہ 1950ء میں آپ نے ھفت روزہ ایک مذہبی جریدہ، شہاب ثاقب کے نام سے جاری کیا، جس کا سلسلہ آج تک قائم ہے ۔

سنہ 1974ء میں آپ کو تین سال کے لیے پاکستان کی اسلامی نظریاتی کونسل کا رکن منتخب کیا گیا ۔

مزید دیکھیں

پنڈت نیک رام

ایک نام "پنڈت نیک رام" شاید آج کے دور کے برادران ملت کے لئے ایک اجنبی نام ہو - مگر یہ کسی دور کا دنیائے شیعہ میں بہت بڑا نام تھا - مولانا سید نجم الحسن کراروی مرحوم کا ذکر ہو تو پنڈت نیک رام کا ذکرنہ آئے  کیسے ہوسکتا ہے؟

پنڈت نیک رام" آف کسولی ضلع انبالہ مدرسہ الواعظین لکھنو آکر مسلمان ہوئے اور ان کا نام غلام الحسنین رکھا گیا - مدرسہ الواعظین لکھنو کے پرنسپل علامہ جناب سید عدیل اختر صاحب مرحوم نے "پنڈت"صاحب کو مولانا سید نجم الحسن کراروی کے سپرد کیا اور آپ نے "پنڈت"صاحب کو تقریباُ 6 ماہ دینی تعلیم دی۔

 

پنڈت نیک رام" کراچی کے انجمن ایرانیان ھال میں رات گئے مجلس پڑھتے تھے۔ جو علامہ رشید ترابی کی کھارادر امام بارگاہ کی مجلس کے بعد ہوتی تھی۔ علامہ رشید ترابی کے پائے کا شیعہ عالم نہ تھا نہ ہے مگر "پنڈت نیک رام" ان کے ہم عصروں میں سے ایک تھے۔

 

مزید دیکھیں

تصنیفات

مولانا سید نجم الحسن کراروی نے بہت سا تحریری سرمایہ چھوڑا اور ملت اس پر جتنا بھی فخر کرے کم ہے ۔ آپ کی کتاب "چودہ ستارے" تو بر صغیر پاک و ہند کے ہر شعیہ گھر کا لازمی جزو ہے۔

 

مولانا سید نجم الحسن کراروی نے کتاب "چودہ ستارے" کے علاوہ درجذیل کتب بھی تصنیف کی ہیں:

تاریخ اسلام - 7 مجلدات

ذکر العباس

مختار آل محمد

الغفاری

روح القران

نص خلافت

بہتر تارے

صحح جعفری ترجمہ و تجرید اصول کافی

کتب دینیات

مزید دیکھیں
تصاویر
مولانا سید نجم الحسن کراروی
.
مولانا سید نجم الحسن کراروی
مولانا سید نجم الحسن کراروی
.
8ڈاؤن لوڈز
زوم
ڈاؤن لوڈ
شیئر کریں
مولانا سید نجم الحسن کراروی مولانا سید نجم الحسن کراروی مولانا سید نجم الحسن کراروی مولانا سید نجم الحسن کراروی مولانا سید نجم الحسن کراروی
متعلقہ لنکس
دیگر علما
کامنٹ
اپنا کامنٹ نیچے باکس میں لکھیں
بھیجیں
نئے اخبار سے جلد مطلع ہونے کے لئے یہاں ممبر بنیں
سینڈ
براہ کرم پہلے اپنا ای میل درج کریں
ایک درست ای میل درج کریں
ای میل رجسٹر کرنے میں خرابی!
آپ کا ای میل پہلے ہی رجسٹر ہو چکا ہے!
آپ کا ای میل کامیابی کے ساتھ محفوظ ہو گیا ہے
ulamaehin.in website logo
ULAMAEHIND
علماۓ ہند ویب سائٹ، جو ادارہ مہدی مشن (MAHDI MISSION) کی فعالیتوں میں سے ایک ہے، علماۓ کرام کی تصاویر اور ویڈیوز کو پیش کرتے ہوۓ، ان حضرات کی خدمات کو متعارف کرواتی ہے۔ نیز، اس سائٹ کا ایک حصہ ہندوستانی مدارس اور کتب خانوں، علماء کی قبور کو متعارف کروانے سے مخصوص ہے۔
Copy Rights 2024