براہ کرم پہلے مطلوبہ لفظ درج کریں
سرچ
کی طرف سے تلاش کریں :
علماء کا نام
حوزات علمیہ
خبریں
ویڈیو
22 شَعْبان 1445
ulamaehin.in website logo
آیت اللہ سید احمد علامہ ہندی رہ

آیت الله سید احمد علامه هندی

Syed Ahmad Allama Hindi

ولادت
1295 ه.ق
لکھنو
وفات
20 شعبان 1366 ه.ق
لکھنو
والد کا نام : آیت اللہ سید ابراہیم
تدفین کی جگہ : غفران مآب امام باڑا
شیئر کریں
ترمیم
کامنٹ
سوانح حیات
تصانیف
تصاویر

سوانح حیات

مولانا سید ابراہیم صاحب کے فرزند 18 ذی الحجہ سنہ 1295 ھ ضلع لکھنؤ میں پیدا ہوئے۔

سنہ 1298ھ کو اپنے والد کے ساتھ عراق گئے اور تحت قبہ بسم اللہ خوانی ہوئی ، دوسری مرتبہ 1305 ھ میں زیارات عراق اور ایران سے مشرف ہوئے۔

مرزا محمد حسن صاحب کشمیری سے اور مولوی سید محمد صاحب مدرس مدرسہ ناظمیہ اور مولوی سید سرفراز حسین صاحب اور مولوی شیخ فدا حسین صاحب ملا سید علی اصغر صاحب اور مولوی مظفر علی خان صاحب مراد آبادی اور تاج العلماء سے درسیات کی تکمیل کی۔

عراق جانے سے قبل تقریر و تحریر کا سلسلہ شروع کردیا تھا مثلا سفر ملتان میں سنی عالم سے مناظرہ کیا جس سے اہل ملتان اب تک ممنون ہیں۔ ایک شیعہ مولوی صاحب سے معراج جسمانی پر مباحثہ کیا ایک آریہ سے ذبح حیوانات پر بحث کی اور عزت و فتح پائی۔

آپ نے عراق کے متعدد سفر کیے۔ ۱۳۲۵ ھ میں مع اہل و عیال۔ ۱۳۲۶ میں اس سفر میں غازی الدین حیدر بادشاہ اودھ کے وقف اور اس کے وظائف کی تقسیم کا مسلئہ طے کرایا۔

۱۳۲۸ھ لکھنو میں یادگار علماء کے نام سے خاندان اجتہاد کے اکابر کے لئے انجمن قائم ہوئی۔ علامہ ہندی نے تیس سال تک اس میں کام کیا۔

۱۳۳۱ھ میں وثیقہ موقوفہ نواب ممتاز محل کی تقسیم کے لئے کربلا گئے۔ اسی زمانے میں علم شوال تا ۱۶ شوال نجف میں قحط آب ہوا تو مولانا روزانہ کوفے سے پانی منگوا کے مفت میں تقسیم فرماتے تھے۔

اسی سال جمادی الاولی ۱۳۳۱ ھ میں مدرسہ دینیہ جعفریہ کی بنیاد رکھی جس میں سو سوا سو طلاب جغرافیہ، ہندسہ، حساب، ترکی، عربی و علوم دینیہ پڑھتے تھے۔ اس مدرسے پر مولانا نے بڑی محنت کی تھی۔

۱۳۳۳ ھ کی جنگ عظیم میں آپ نے عوام کی بڑی خدمت کی اور ۴۵ زن و فرزند افراد کا قافلہ کے کر بہزار دقت بصرے آئے اور ربیع الثانی ۱۳۳۴ ہندوستان واپس پہنچے۔

۱۳۳۵ ھ میں انجمن دارالتبلغ قائم کی۔

عراق کے علماء میں آیت اللہ مرزا فتح اللہ شیرازی مشہور بہ شیخ الشریعت، آیت اللہ سید محمد کاظم طباطبائی اقای محمد باقر طباطبائی، اقای حاج شیخ حسین مازندرانی رحمہم اللہ نے مولانا سید احمد کو اجازت دیے جن میں سے جناب ملا محمد کاظم خراسانی نجفی نے اجازہ میں لکھا:

فی الحقیقت علم وران صفحات منحصر بمثل ایشان ست پس امر ایشان امر من و طاعت ایشان طاعت من و فعل من.

 

مولانا سید احمد با عمل، مدبر اور مفکر عالم تھے۔ جمال الدین افغانی کی تحریک کا شباب تھا۔ انگریزوں سے نفرت بڑھ رہی تھی۔ مولانا سید احمد نے قومی مفادات کے تحفظ کی خاطر عراق میں قونصل برطانیہ سے ٹکر لی اور اوقاف لکھنو کی جو خطیر رقم لکھنو سے نجف و کربلا و غیرہ کے لئے جاتی تھی اس کا محسابہ کیا اور صحیح مستحقین تک پہنچانے اور عراق میں زائرین کے تحفظ کی سعی کی ۔ وطن آکر مولانا نے علامہ ہندی کے نام سے شہرت پائی ۔ وہ شہر شہر قریے قریے دورے کرتے رہے اور دینی ، سیاسی اور علمی مسائل کے لئے عملی منصوبے بنائے۔ انھوں نے آریوں ، ہندؤں اور مختلف مذاہب و ملل کے افراد سے مباحثے کئے ۔ پورے ملک کے دورے کرکے اسلامی تبلیغات کا کام انجام دیا ۔ بہت سے شہروں میں ذہنی اور علمی بیداری کے مرکز قائم کیے ۔

وہ طویل مدت تک کلکتے میں رہے اور وہاں تبلیغی کتابچے چھاپتے رہے۔ علامہ ہندی نے قوم کی علمی اور ذہنی ، سیاسی اور سماجی اصلاح و ترقی کے لئے پوری زندگی جد و جہد کی ۔

 

وفات

پنجشنبہ 20 شعبان 1366 ھ لکھنو میں رحلت فرمائی اور غفراں مآب کے امام باڑے میں دفن ہوئے۔

 

اولاد

مولانا سید محمد ابراہیم عرف سید محمد صاحب ملتان میں وفات پائی تاریخی نام سید ذوالفقار حسین تھا۔

سید محمد یوسف صاحب ، تاریخی نام سید خورشید حسن ہے

آقا حسین سید محمد مصطفی

 

مزید دیکھیں

تصانیف

تألیفات عربی

١. ساعتيه (صرف، چاپی)

۲- زبدة الكلام (چاپی)

۳- تفسير سورة الحمد و تفسیر مسأله (عربی)

۴- فلسفة الاسلام کیمیا

۵- المنطق

۶- اشارات في الكلام

7- التصريف

۸- الياقوت

9- قاسمية

  1. كفاية السائلین

۱۱. جواز نجزي في الاجتهاد

۱۲. مدارج الموصول شرح معارج الاصول

۱۳- هموع دموع العينين مقتل ابی الحسنین

۱۴- بسط مقال في اسماء الرجال،

۱۵۔ دراية الحدیث

۱۶- عماد الدين (فقه، فارسی، عربی)

۱۷- انشاء صد برگ

۱۸- انشای عجب العجاب

19- ورثة الأنبياء

۲۰- حل مسأله مشكله (اردو).

 

تألیفات فارسی

۰۲۱ ریاض العباد (فقه)

۲۲- شکیات و جدول احکام نماز

۲۳. فتاوی احمدیه

۲۴- احكام المسافرين

۲۵- رساله عملیه

۲۶- ازهار الهدی در رد اسرار الهدی

۲۷- اثبات حق در رد نصاری

۲۸. عشره مبشره مقاتل

۲۹. حمایت الاسلام (۲ جلد)

۳۰- دوره اول اسلام (۲جلد، چاپی)

۳۱- المسيحية و الاسلام (چاپی)

۲۳. حل مسأله مشكله (چاپی)

۳۳- الدليل و البرهان (چاپی)

۳۴. نظر فلسفیانه بر معراج (چاپی)

۳۵- اختبارات در ادعیه (چاپی)

۳۶ - فلسفة الاسلام (۱۰ جلد، ناتمام)

۳۷- کشکول

۳۸- الشفيع و الصرف (۳ بخش)

۳۹- دارالابرار

۴۰. مقالات مفیده

۴۱ - رسالة الصحف

۴۲- المسخ (چاپی)

مزید دیکھیں
تصاویر
آیت اللہ سید احمد علامہ ہندی رہ
.
آیت اللہ سید احمد علامہ ہندی رہ
آیت اللہ سید احمد علامہ ہندی رہ
.
زوم
ڈاؤن لوڈ
شیئر کریں
آیت اللہ سید احمد علامہ ہندی رہ آیت اللہ سید احمد علامہ ہندی رہ آیت اللہ سید احمد علامہ ہندی رہ آیت اللہ سید احمد علامہ ہندی رہ
دیگر علما
کامنٹ
اپنا کامنٹ نیچے باکس میں لکھیں
بھیجیں
نئے اخبار سے جلد مطلع ہونے کے لئے یہاں ممبر بنیں
سینڈ
براہ کرم پہلے اپنا ای میل درج کریں
ایک درست ای میل درج کریں
ای میل رجسٹر کرنے میں خرابی!
آپ کا ای میل پہلے ہی رجسٹر ہو چکا ہے!
آپ کا ای میل کامیابی کے ساتھ محفوظ ہو گیا ہے
ulamaehin.in website logo
ULAMAEHIND
علماۓ ہند ویب سائٹ، جو ادارہ مہدی مشن (MAHDI MISSION) کی فعالیتوں میں سے ایک ہے، علماۓ کرام کی تصاویر اور ویڈیوز کو پیش کرتے ہوۓ، ان حضرات کی خدمات کو متعارف کرواتی ہے۔ نیز، اس سائٹ کا ایک حصہ ہندوستانی مدارس اور کتب خانوں، علماء کی قبور کو متعارف کروانے سے مخصوص ہے۔
Copy Rights 2024